logo

ای پیپر

اوپینین پول

کیا اترپردیش اسمبلی انتخابات کے نتائج نے مسلم ووٹ کو بے وقعت ثابت کردیا ؟

ہاں
نہیں

نئی دہلی، 8فروری (یو این آئی) تیلگو دیشم پارٹی(ٹی ڈی پی) کے ارکان نے آندھراپردیش کو خصوصی درجہ دینے کے مطالبہ کو لیکر کئے گئے ہنگامہ کی وجہ سے وقفہ سوالات کے دوران ایوان بالا اور ایوان زیریں کی کارروائی دو بجے تک ملتوی کرنی پڑی۔صبح وقفہ سوالات شروع ہوتے ہی ٹی ڈی پی کے ارکان ہاتھوں میں پوسٹر لئے اسپیکر کی میز کے سامنے آگئے۔ ارکان لگاتار نعرے لگا رہے تھے جس میں ْ آندھراپردیش کو بچانے کیلئے صوبہ کو ’ خصوصی درجہ دینے ‘ اور صوبہ کے مختلف پروجیکٹوں کو جلد از جلد پورا کرنے کا مطالبہ کر رہے تھے۔ اس کے علاوہ وہ مرکز میں حکومت کرنے والی اور آندھراپردیش سرکار میں ان کے ساتھ شامل بی جے پی سے ’ گٹھ بندھن دھرم‘ نبھانے کا بھی مطالبہ کررہے تھے۔دریں اثنا اسپیکر سمترا مہاجن نے وقفہ سوالات جاری رکھا۔ انہوں نے ہنگامہ کر رہے ارکان سے لوک سبھا ملازمین سے دور رہنے اور انہیں کام جاری رکھنے دینے کی بھی اپیل کی۔ تقریبا ساڑھے گیارہ بجے تیلگو دیشم کے ایک ایم پی نے ایک ملازم کی میز سے کتابیں اٹھا لیں۔ ہنگامہ کر رہے ارکان کے سلسلے میں سخت رخ اختیار کرتے ہوئے محترمہ مہاجن نے کہا کہ اب مجھے کوئی قدم اٹھانا ہوگا۔ اس کے بعد انہوں نے 15 منٹ کے لئے ایوان کی کارروائی ملتوی کردی۔

اس پوسٹ کے لئے کوئی تبصرہ نہیں ہے.
تبصرہ کیجئے
نام:
ای میل:
تبصرہ:
بتایا گیا کوڈ داخل کرے:


Can't read the image? click here to refresh