logo

ای پیپر

اوپینین پول

کیا اترپردیش اسمبلی انتخابات کے نتائج نے مسلم ووٹ کو بے وقعت ثابت کردیا ؟

ہاں
نہیں

ٹوکیو، 5 جنوری (یو این آئی) جاپان کے وزیر اعظم شینزو آبے نے ایٹمی اسلحہ سے لیس شمالی کوریا کو "ناقابل قبول" قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ اس وقت جاپان دوسری عالمی جنگ کے بعد سب سے بڑے خطرے کا سامنا کر رہا ہے۔ نئے سال کے آغاز پر می صوبے میں ایک مذہبی مقام پر مسٹر آبے نے کل کہا کہ جوہری ہتھیاروں سے لیس شمالی کوریا کسی بھی پوزیشن میں قابل قبول نہیں ہے۔ سی این این کی رپورٹ کے مطابق مسٹر آبے نے بین الاقوامی برادری سے شمالی کوریا پر اس کے عزائم کم کرنے کے لیے سخت دباؤ بنانے کی اپیل کی ہے۔ گزشتہ چند ماہ میں اس علاقے میں حالات انتہائی بگڑی چکے ہیں۔ شمالی کوریا نے ستمبر میں اپنا چھٹا ا اور سب سے زیادہ طاقتور جوہری تجربہ کیا تھا۔ شمالی کوریا نے گزشتہ 29 نومبر کو ایک میزائل تجربہ کیا تھا جو جاپان کے خصوصی اقتصادی علاقے میں گرا تھا۔ مسٹر آبے نے کہا کہ بین الاقوامی برادری کو مل کر شمالی کوریا پر اپنی پالیسیاں تبدیل کرنے کے لئے دباؤ بڑھانا ہوگا۔ انکوں نے صورت حال کی سنگینی کا موازنہ دوسری عالمی جنگ سے کرتے ہوئے کہا کہ اس جنگ کا اختتام جاپان کے دو شہروں پر دو ایٹم بم حملوں کے بعد ہوا تھا۔ یہ کہنا بے جا نہیں ہوگا کہ دوسری عالمی جنگ کے بعد جاپان اس وقت سب سے زیادہ سنگین خطرے کا سامنا کر رہا ہے۔

اس پوسٹ کے لئے کوئی تبصرہ نہیں ہے.
تبصرہ کیجئے
نام:
ای میل:
تبصرہ:
بتایا گیا کوڈ داخل کرے:


Can't read the image? click here to refresh